pic
pic

حضرت آیت اللہ فاضل لنکرانی (دامت برکاتہ) نے آچ اپنے درس خارج میں پاکستان میں شیعوں کے قتل عام کی شدید الفاظ میں مذمت کیا

مزید
طول تاریخ میں شیعوں پر بہت زیادہ ظلم و بربریت ہوا ہے اور حق تلفی ہوتے رہے ہیں


حضرت ابوطالب (ع) کے نام پر برگزار ہونے والے بین الاقوامی سیمنار کے ذمہ داروں سے حضرت آيت اللہ فاضل لنکرانی (دامت برکاتہ) کا خطاب

مزید
 اسلام کی آبياری اور پیغمبر اکرم (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) کی رسالت کے لئے میدان ہموار کرنے میں حضرت ابوطالب کا  بہت بڑا کردار ہے۔

خداوند متعالی نے حضرت فاطمہ زہرا (س) کو اپنی نور عظمت سے خلق کیا ، پیغمبر اکرم (ص) اور امیر المومین(ع) کے وجود مبارک کے بارے میں بھی ہے کہ ایسے ہی بیان فرمایا ہے کہ ان...

مزید
حضرت زہرا کے فضائل

«و العصر» ثمر کیمپ کے اختتامی پروگرام سے حضرت آیت اللہ فاضل لنکرانی (دامت برکاتہ) کا خطاب ، یہ ثمر کیمپ یورپ، آمریکا ، ایشاء اور آسٹریلیا کے اسٹوڈینس کے لئے قم میں...

مزید
امامت سے دور ہونا ، عقل اور عقلانیت سے دور ہونا ہے

شہداء خداوند متعالی کے کلمات تام کی مدد کے لئے قیام کيے ۔۔۔ محرم اور عاشورا کی حقیقت انہیں چیزوں میں خلاصہ ہوتا ہے ، امام حسین (ع) کلمۃ اللہ ہے ، امیر المومنین(ع)...

مزید
   انجمن خادم الشہداء کے جانبازوں اور جانثاروں سے حضرت آیت اللہ فاضل لنکرانی (دام عزہ ) کاخطاب

مجموعہ دروس

تالیفات

  • حریم قرآن کا دفاع
    حریم قرآن کا دفاع
کتاب کا تعارف
حریم قرآن کا دفاع
حریم قرآن کا دفاع
کتاب کی فہرست

تحریف قرآن ایک ایسا موضوع ہے جسے قرآن کریم پر ایمان رکھنے ولا کوئی شخص قبول نہیں کر سکتا کیونکہ قرآن کریم اس کی اجازت نہیں دیتا، تحریف یعنی کمی و بیشی تو بہت دور کی بات ہے اس میں کسی شک کی گنجائش بھی نہیں ، خدا کا وعدہ ہے :'' إِنَّا نَحْنُ نَزَّلْنَا الذِّكْرَ وَ إِنَّا لَهُ لَحافِظُون‏'' ہم نے ہی قرآن کو نازل کیا ہے اور ہم ہی اس کی حفاظت کرنے والے ہیں

خصوصی مطالب

 امام صادق امام باقر سے اور امام باقر ، امام سجاد سے اور امام سجاد امام حسین بن علی سے اور امام حسین ،امام حسن سے اور امام حسن امیرالمومنین سے اور امیر المومنین علیہم السلام ،رسول اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم سے نقل کرتے ہیں کہ آنحضرت صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم نے فرمایا: «خُلِقَ نُورُ فَاطِمَةَ(سلام الله علیها) قَبْلَ أَنْ تُخْلَقَ الْأَرْضُ وَ السَّمَاء»حضرت زہرا سلام اللہ علیہا  کی نور زمین اور آسمان کی خلقت سے پہلے خلق ہوئی ہے ، اس سے کیا مراد ہے ؟ مراد یہ ہے کہ اگر حضرت فاطمہ سلام اللہ علیہا  کی نور نہ ہوتی تو نہ کوئی آسمان تھا  نہ کوئی زمین تھی ، اور اگر حضرت فاطمہ سلام اللہ علیہا  کی نور نہ تھی تو نہ کوئی انسان اس دنیا میں تھے اور نہ کوئی جنات ۔

فاطمہ سلام اللہ علیہا  کی حقیقت رسول اکرم صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی کلمات میں موجود ہے ،ہمیں چاہئے کہ اپنے آپ کو اس حقیقت تک پہنچا دیں ، اگر ہم میں سے ہر ایک  اپنے وجود کی حقیقت کو جاننا  چاہتے ہیں تو جب تک حضرت زہرا سلام اللہ علیہا  کی حقیقت کو درک نہ کرے اگرچہ وہ ہر ایک کی اپنی حیثیت کے مطابق ہو، کسی نتیجہ تک نہیں پہنچ سکيں گے ،فاطمہ شناسی ، خدا شناسی کی علتوں کا سلسلہ ہے ، یہی ہمارا اعتقاد ہےاور یہ اعتقاد بھی قرآن کریم کی آیات اور روایات سے لیا گیا ہے ، ہم جب تک اہلبیت کو نہ پہچانیں ، جب تک فاطمہ سلام اللہ علیہا  ، علی علیہ السلام اور ان کے اولاد کو نہ پہچانيں ،خدا کو پہچان ہی نہیں سکتے ۔

( حضرت صدیقہ طاہرہ سلام اللہ علیہا  کی شخصیت کے بارے میں حضرت آیت اللہ کے بیانات سے ماخوذ)